انڈی کار ڈرائیور جسٹن ولسن ریس حادثے میں ہلاک

انڈی کار ڈرائیور جسٹن ولسن ریس حادثے میں ہلاک
انڈی کار ڈرائیور جسٹن ولسن ریس حادثے میں ہلاک
برطانیہ کے انڈی کار ڈرائیور جسٹن ولسن سر میں شدید چوٹ لگنے کے باعث اتوار کو انتقال کرگئے۔

امریکی ریاست پنسلوینیا کے پوکونو ریس وے میں 200 لیپس پر مشتمل ریس کے 179ویں لیپ کے دوران ولسن کی گاڑی کی ایک دوسرے ڈرائیور کی گاڑی سے ٹکر تھی۔

ریس کے دوران سیج کرم کی گاڑی تیز رفتاری کے باعث الٹ گئی اور اس کے کچھ ٹکڑے جسٹن ولسن کی گاڑی سے ٹکرائے جس کے بعد ان کی گاڑی دیوار میں جا لگی۔

حادثے کے بعد ولسن کو ہیلی کاپٹر کے ذریعے ہسپتال لے جایا گیا تاہم پیر کی شام انڈی کار حکام نے ان کی موت کی تصدیق کردی۔
سیج کرم حادثے کے وقت ریس میں سب سے آگے تھے، ان کو ایڑھی اور کلائی میں چوٹیں آئیں تاہم ان کو علاج کے بعد ہسپتال سے فارغ کردیا گیا ہے۔

جب جسٹن ولسن کوما میں تھے تو سیج کرم نے ان کے حق میں ایک پیغام ٹویٹ کیا جس میں انھوں کہا کہ وہ جسٹن ولسن اور ان کے خاندان کے لئے دعا گو ہیں ۔

انڈی کار مقابلوں کو منعقد کرانے والی کمپنی ہلمین اینڈ کو کے سی ای او مارک مائلس نے کہا کہ ‘یہ انڈی کار اور موٹر سپورٹس کے لئے ایک انتہائی سوگوار دن ہے۔

انھوں نے یہ بھی کہا کہ ’جسٹن کی کار ریس میں اعلیٰ اہلیت ان کی رحم دلانہ اور انسان طبیعت سے مشابہہ تھی جس کی وجہ سے وہ کھیل کے ایک انتہائی باعزت رکن کے طور پر جانے جاتے تھے۔

Comments are closed.